ریاست

سیاسی طور پر ایک منظم ملت جو کم و بیش آزاد ہوتی ہے اور اس کے قبضہ و تصرف میں ایک مستقل اور معین علاقہ ہوتا ہے۔ کچھ وفاقی جمہوریہ ممالک کا کوئی حصہ اس ذیل میں نہیں آتا، خواہ وہ ریاست ہی کہلاتا ہو، جیسے ریاست ہائے متحدہ امریکا یا بھارت کی کوئی ریاست یا صوبہ۔ بھارت اور متحدہ ریاستہائے امریکا میں ریاست سے انتظامی تقسیم کا دوسرا درجہ مراد لیا جاتا ہے، ا یسے وفاق میں شامل ریاستیں صرف اندرونی معاملات میں خود مختار ہوتی ہیں۔ بیرونی معاملات، کرنسی، دفاع وغیرہ پر وفاق یا مرکز کا کنٹرول ہوتا ہے۔

ریاست کا وقوع

ریاست کا قیام اس لیے عمل میں لایا جاتا ہے کہ مخصوص علا قہ میں آباد افراد کو اپنی صلاحیتوں کے اظہار کا پورا پورا موقع ملے اور وہ امن و سکون کی فضا میں اپنی زندگیاں گزار سکیں۔

مزید دیکھیے

آندھرا پردیش

آندھرا پردیش (تیلُگو: ఆంధ్ర ప్రదేశ్) جنوب ہند (موجودہ بھارت) کی ایک ریاست۔ شہر حیدر آباد کو 2 جون 2014سے ریاست تلنگانہ اور آندھرا پردیش کا مشترکہ دار الحکومت قرار دیا گيا ہے۔ جو اگلے دس سال کے لیے اب عارضی دار الحکومت ہے۔ دس کے دوران ریاست آندھرا پردیش کو اپنا نیا دار الحکومت بنانا ہو گآ۔ بھارت کی آزادی کے بعد یہ ریاست “ریاست آندھرا“کے نام سے موسوم تھی۔ لیکن، لسانی بنیاد پر بھارت میں ریاستوں کی تقسیم عمل میں آئی، اس موقع پر، اکم نومبر 1956 کو لسانی بنیاد پر قائم کی گئی پہلی ریاست ہے۔ اس ریاست کی سرکاری زبان تیلگو ہے اور دوسری سرکاری زبان اردو ہے۔

الینوائے کی کاؤنٹیوں کی فہرست

امریکی ریاست الینوائے کی 102 کاؤنٹیاں ہیں۔

انانکارپوریٹڈ علاقہ

انانکارپوریٹڈ علاقہ (Unincorporated area) یا انانکارپوریٹڈ کمیونٹی (Unincorporated community) قانونی طور پر ایسا علاقہ یا زمین ہے جو اس کے اپنے مقامی میونسپل کارپوریشن کے زیر انتظام نہیں، بلکہ وہ بڑی انتظامی تقسیم مثلاً ٹاؤن شپ، پیرش، بورو، کاؤنٹی، شہر، کینٹن، وفاقی ریاست، صوبہ یا ملک کے زیر انتظام ہو۔

انڈیانا

ریاستہائے متحدہ امریکا کی ایک ریاست ۔

انڈیانا کی کاؤنٹیوں کی فہرست

ریاستہائے متحدہ کی ریاست انڈیانا کی 92 کاؤنٹیاں ہیں۔

جارجیا (امریکی ریاست)

ریاستہائے متحدہ امریکا کی ایک ریاست ۔

رانی پور ریاست ریلوے اسٹیشن

رانی پور ریاست ریلوے اسٹیشن پاکستان کے صوبہ سندھ میں واقع ہے۔

ریاست واشنگٹن

ریاستہائے متحدہ امریکا کی ایک ریاست ۔

ریاست ہائے متحدہ کی مردم شماری، 2010ء

2010ء ریاست ہائے متحدہ مردم شماری (2010 United States Census) امریکا کی تیئیسویں اور جدید ترین قومی مردم شماری ہے جو 1 اپریل، 2010ء کو عمل میں آئی۔

ریاستہائے متحدہ امریکا

ریاستہائے متحدہ امریکا شمالی امریکا میں واقع ایک ملک ہے۔ اسے عرف عام میں صرف یونائیٹڈ سٹیٹس (انگریزی: United States؛ ریاستہائے متحدہ) بھی کہتے ہیں جبکہ امریکا (انگریزی: America؛ امیریکہ) کا لفظ بھی زیادہ تر اسی ملک سے موسوم کیا جاتا ہے جو بعض ماہرین کے مطابق تکنیکی لحاظ سے غلط ہے۔

ریاستہائے متحدہ شمالی امریکا کا دوسرا اور دنیا کا تیسرا (یا چوتھا) بڑا ملک ہے۔ اس کے شمال میں کینیڈا، جنوب میں میکسیکو، مشرق میں بحر اوقیانوس اور مغرب میں بحر الکاہل واقع ہیں۔ ریاست ہائے متحدہ ایک وفاقی آئینی ریاست ہے اور اس کا دارلحکومت واشنگٹن ڈی سی ہے۔

37 لاکھ مربع میل یعنی 96 لاکھ مربع کلو میٹر پر پھیلا ہوا یہ ملک دنیا کا تیسرا بڑا ملک ہے جس میں کل تیس کروڑ سے زائد لوگ آباد ہیں۔

امریکی فوج، معشیت، ثقافت اور سیاسی اثر و رسوخ میں انیسویں اور بیسویں صدی میں بڑھا ہے۔ روس کے زوال کے بعد جب سرد جنگ ختم ہوئی تو امریکا دنیا کی واحد عالمی طاقت کے طور پر ظاہر ہوا اور اب امریکا دنیا بھر میں کھلم کھلا مداخلت کر رہا ہے۔

ریاستہائے متحدہ امریکا کی سیاسی تقسیم

ریاستہائے متحدہ امریکا کی سیاسی تقسیم (Political divisions of the United States) ریاست ہائے متحدہ امریکہ کے مختلف ذیلی قومی اداروں کی وضاحت ہے۔ بنیادی تقسیم ریاست ہے۔

سیاسی جماعت

سیاسی جماعت، سیاسی گروہ بندی کا نام ہے جو کسی بھی خطے میں ریاست کی حکومت میں سیاسی طاقت کے حصول کے لیے تشکیل دی جاتی ہے۔ سیاسی جماعت کسی بھی ریاست میں انتخابی مہم، تعلیمی اداروں میں فعالیت یا پھر عوامی احتجاجی مظاہروں کی مدد سے اپنی موجودگی اور سیاسی طاقت کا اظہار کرتی ہیں۔ سیاسی جماعتیں اکثر اپنے نظریات، منصوبہ جات اور اپنے نقطہ نظر کو تحریری صورت میں عوام کے سامنے پیش کرتی ہیں جو اس جماعت کا منشور کہلاتا ہے جو اس مخصوص سیاسی جماعت کی ذہنیت اور مخصوص اہداف بارے عوام کو آگاہ کرتا ہے۔ اسی منشور اور اہداف کی بنیاد پر ریاست میں سیاسی جماعتوں کے مابین اتحاد بنتے یا پھر ٹوٹتے ہیں۔

مشی گن

ریاستہائے متحدہ امریکا کی ایک ریاست ۔

ملک

لفظ ‘‘ملک’’ کے دوسرے استعمالات کے لیے دیکھیے: ملک (ضد ابہام)

سیاسی جغرافیہ (Political Geography) اور عالمی سیاست (International Politics) میں، ملک کسی جغرافیائی یا ارضیاتی وجود کے سیاسی تقسیم کو کہا جاتا ہے۔ عموماً، ایک خودمختار علاقہ۔ یہ اِصطلاح ریاستی اقوام یا حکومت و قوم کے ساتھ تقریباً مربوط ہے۔

عام زندگی میں یہ لفظ کبھی کبھار قوم اور ریاست دونوں کے لیے اِستعمال کیا جاتا ہے۔ ہاں البتہ، تعریفات میں فرق ہو سکتا ہے۔

اس کے علاوہ ایک ملک کا انسانی شخصیت اور پہچان پر گہرا اثر ہوتا ہے، ملک نظام کا مجموعہ بھی ہوتا ہے جس پر ایک قوم کی بنیاد ہوتی ہے۔ ملک کے دو اہم جز ہوتے ہیں ایک جغرافی اور دوسرا ذہنی او نظریاتی۔ ملک ہی کا اثر ہوتا ہے کہ ایک ہی زبان اور مذہب کے لوگ ہوتے ہیں لیکن جب وہ مختلف ممالک میں ہوتے ہیں تو ایک طرف اکثر بہت آگے چلا جاتا ہے اور دوسرا طرف پیچھے رہ جاتا ہے حالانکہ زبان اور ثقافت ایک ہوتے ہیں۔

مہاراشٹر

مہاراشٹر, رقبہ کے لحاظ سے بھارت کی تیسری اور آبادی کے لحاظ سے دوسری سب سے بڑی ریاست ہے۔ اس کی سرحدیں گجرات، مدھیہ پردیش، چھتیس گڑھ، آندھرا پردیش، کرناٹک اور گوا سے ملتی ہیں۔

ریاست کے مغربی ساحل پر بحیرہ عرب واقع ہے۔ بھارت کا گنجان آباد ترین شہر ممبئی ریاست کا دار الحکومت ہے۔

2001ء کے مطابق ریاست کی کل آبادی 96،752،247 ہے جبکہ فی مربع کلومیٹر 314.42 افراد بستے ہیں۔

مہاراشٹر کا کل رقبہ 307،713 مربع کلومیٹر ہے جبکہ ریاست کے 35 اضلاع ہیں۔

سرکاری زبان مراٹھی ہے۔

مینیسوٹا

ریاستہائے متحدہ امریکا کی ایک ریاست ۔

مینیسوٹا کی کاؤنٹیوں کی فہرست

ریاستہائے متحدہ امریکا کی ریاست مینیسوٹا میں 87 کاؤنٹیاں ہیں۔

نیو یارک

مطلوبہ مضمون پر جائیے

نیویارک شہر: امریکا کا سب سے عظیم شہر

ریاست نیویارک: امریکا کی ایک ریاستنیو یارک متحدہ امریکا کے شمال مشرق کی ایک ریاست ہے۔ نیویارک امریکا کی پچاس ریاستوں میں رقبہ کے حساب سے ستائیسویں، آبادی کے تناسب سے تیسری اور شرح آبادی کے تناسب سے ساتویں بڑی ریاست ہے۔ نیویارک جنوب میں نیو جرسی اور پنسلوانیا اور مشرق میں کنیکٹیکٹ، میساچوسٹس اور ورمونٹ کی ریاستیں ہیں۔ نیویارک کی بین الاقوامی سرحد کینیڈا سے ملتی ہے اور شمال مغرب میں اونٹاریو اور شمال میں کیوبیک کے صوبے ہیں۔

نیو یارک شہر اکیاسی لاکھ کی آبادی کے ساتھ امریکا کا سب سے گنچان آباد شہر اور نیویارک ریاست کے چالیس فیصد

لوگوں کا گھر ہے۔ یہ شہر سرمایہ کاری اور ثقافت کا مرکز پہچانا جاتا ہے اور باب ہجرت (گیٹ وے آف امیگریشن) جانا جاتا ہے۔ امریکی محکمہ تجارت کے مطابق نیویارک غیر ملکی سیاحوں کی اولین ترجیح ہے۔ اس شہر کا نام سترہویں صدی کے ڈیوک آف یارک، جیمس اسٹوارٹ اور مستقبل کے جیمس دوم اور ہفتم برطانیہ اور اسکاٹ لینڈ پر رکھا گیا۔

ست رہیوں صدی عیسوی میں ڈچ آبادکاروں کے اس علاقہ میں آمد کے وقت یہاں مقامی امریکی قبائل بستے تھے۔ 1609 میں ڈچ جہازران ہینری ہڈسن نے اس علاقہ پر پہلا دعوٰی کیا۔ 1614 میں دور حاضر کے شہر البانی کے قریب قلعہ نساء کی بنیاد رکھی گئی اور جلد ہی ڈچ آبادیوں کو نیا ایمسٹرڈیم اور وادی دریائے ہڈسن میں بسایا گیا اور نئے نیدر لینڈ کی بنیاد رکھی گئی۔ 1664 میں برطانیہ اس بستی پر قابض ہو گیا۔

تقریباً ایک تہائی امریکی انقلابی جنگوں کے میدان نیویارک میں سجے۔ 1777 میں نیویارک کا ریاستی آئین پاس ہوا۔ 26 جولائی 1788 میں نیویارک ریاستہائے متحدہ امریکا کے آئین کو منظور کرنے والی گیارہویں ریاست بنی۔

کیلیفورنیا

کیلیفورنیا (California) ریاستہائے متحدہ امریکا کی سب سے گنجان آباد ریاست ہے۔

دیگر زبانیں

This page is based on a Wikipedia article written by authors (here).
Text is available under the CC BY-SA 3.0 license; additional terms may apply.
Images, videos and audio are available under their respective licenses.